ہم سے پوچھے کوئی کہاں ہیں حضورؐ

ہم سے پوچھے کوئی کہاں ہیں حضورؐ
بندہ و رب کے درمیاں ہیں حضورؐ

آپؐ کے جتنے مدح خواہ ہیں حضورؐ
سب ہی ممتاز بے گماں ہیں حضورؐ

آپؐ کی بات، بات ہے رب کی
آپؐ قرآن کی زباں ہیں حضورؐ

کس کی سیرت ہے روشنی کی دلیل
نقشِ پا کس کے کہکشاں ہیں حضورؐ

کون ہے جس پہ ناز ہے رب کو
بالیقیں اور بے گماں ہیں حضورؐ

گلستاں ہے یہ کائنات اگر
سچ یہ ہے جانِ گلستاں ہیں حضورؐ

کون ہے کائنات کا محور
حاصلِ بزمِ کن فکاں ہیں حضورؐ

ہر زمانہ ہے ان کا باجگزار
ہر زمانے کے حکمراں ہیں حضورؐ

ہے یہ ایمان ہر مسلماں کا
جسم ہے دین اور جاں ہیں حضورؐ

پیشِ رب بھی خیال اُمت ہے
کس قدر ہم پہ مہرباں ہیں حضورؐ

کیا ہماری بساط ہے اعجازؔ
ہم ہیں ذرّے تو آسماں ہیں حضورؐ