دیوانگی کو پہلے خرد آشنا کرو

دیوانگی کو پہلے خرد آشنا کرو
پھر اپنے رخ کو سوئے حبیبؐ خدا کرو

تعلیمِ مصطفیؐ کا تقاضہ یہی تو ہے
رب کے سوا کسی سے نہ تم التجا کرو

خوش ربِّ کائنات بھی ہو اور رسولؐ بھی
اس طرح حق ثنائے نبیؐ کا ادا کرو

بیکار ہے اگر نہیں شائستۂ درود
رب کے حضور لاکھ دعا پر دعا کرو

دلوں کو نہ جب سکون ملے بزمِ دہر میں
لوگو! درِ نبیؐ کی طرف چل دیا کرو

دعویٰ اگر ہے دوستو! حبِّ رسولؐ کا
قرآن پاک سے بھی سند لے لیا کرو

تم جب بھی لو لگاؤ دیارِ رسولؐ سے
خواہش کے ہر چراغ کو گل کر دیا کرو

یارو! یہی ہے ایک طریقہ نجات کا
ہر وقت پیرویٔ رسولِؐ خدا کرو

دنیا کے تو حقوق ادا کر رہے ہو تم
اللہ کے رسولؐ کا بھی حق ادا کرو

اعجازؔ کر چکے ہو ادا حقِ بندگی
لازم یہ اب ہے مدحتِ خیرالوریٰؐ کرو