پوچھتے ہو مجھ سے کیا، میرے نبیؐ کی ذات ہے

پوچھتے ہو مجھ سے کیا، میرے نبیؐ کی ذات ہے
روشنی کا سلسلہ، میرے نبیؐ کی ذات ہے

ہر قدم پر رہنما، میرے نبیؐ کی ذات ہے
شافعِ روزِ جزا، میرے نبیؐ کی ذات ہے

خلق میں کوئی نہیں ہے، اُن سے بڑھ کر محترم
زینتِ عرشِ علا، میرے نبیؐ کی ذات ہے

یہ وہ ہے اعجاز جو حاصل کسی کو بھی نہیں
صرف محبوب خدا، میرے نبیؐ کی ذات ہے

کس قدر محدود میری عقل کے ہیں دائرے
میری سوچوں سے سوا میرے نبیؐ کی ذات ہے

کس سے وابستہ ہے رحمت، کس سے ہے دنیا میں خیر
کون ہے خیرالوریٰ، میرے نبیؐ کی ذات ہے

مونس و غمخوار میرا، حشر میں کوئی نہیں
صرف میرا آسرا، میرے نبیؐ کی ذات ہے

حشر تک مخلوق، خالق سے جدا ہوگی نہیں
درمیاں میں رابطہ، میرے نبیؐ کی ذات ہے

جب کیا ایمان کی بابت، فرشتوں نے سوال
میں نے اُن سے کہہ دیا، میرے نبیؐ کی ذات ہے

صاحبِ اعجاز بتلاؤ تو ہے اعجازؔ کون
سر سے پا تک معجزہ، میرے نبیؐ کی ذات ہے