بحرِ حبِّ مصطفیٰؐ میں غرق ہو کر دیکھنا

بحرِ حبِّ مصطفیٰؐ میں غرق ہو کر دیکھنا
چاہتے ہو تم جو قطرے کو سمندر دیکھنا

آج انساں اِرتقا کی آخری منزل میں ہے
آدمی پر یہ احسانِ پیمبرؐ دیکھنا

تم کو ہر صورت میں آئے گا نظر رُوئے رسولؐ
دل کی آنکھوں سے کبھی قرآن پڑھ کر دیکھنا

کاش جینے کی دعا ہو جائے طیبہ میں قبول
روضۂ خیرالبشرؐ پھر زندگی بھر دیکھنا

منزلِ قوسین پر ہیں جلوہ گر شاہِ امم
آدمی کا مرتبہ اللہ اکبر دیکھنا

جب کسی صورت نہ حل ہوں زندگی کے مسئلے
جانبِ طیبہ قدم اپنے بڑھا کر دیکھنا

مصطفیٰؐ نے کتنے ذرّوں کو بنایا آفتاب
شانِ صدیقؓ و عمرؓ، عثمانؓ و حیدرؓ دیکھنا

دل کو یہ محسوس ہوتا ہے کہ ہم اپنوں میں ہیں
کوچۂ احمدؐ میں یہ دلچسپ منظر دیکھنا

خلد میں پہنچیں گے جس دم تشنہ کامِ مصطفیٰؐ
بہرِ استقبال اُٹھے گی موجِ کوثر دیکھنا

جذبۂ حبِّ نبی میں جب کمی محسوس ہو
دوستو! نعتِ شہہِ ابرارؐ پڑھ کر دیکھنا

لاکھ کھینچے اپنی جانب تم کو دنیا کی کشش
مصطفیٰؐ کی سمت ہی اعجازؔ مڑ کر دیکھنا