معجزہ اَخلاق کا ایسا دکھایا آپؐ نے

معجزہ اَخلاق کا ایسا دکھایا آپؐ نے
دشمنوں کو پیار کے قابل بنایا آپؐ نے

خلق کو پیغام اِقرأ کا سنایا آپؐ نے
جہل کی دیوار کو کس نے گرایا، آپؐ نے

آپؐ کے آنے سے پہلے کیا تھی یہ دنیا حضورؐ
اِس جہنم زار کو جنت بنایا آپؐ نے

آپؐ ہی تو ناخدا ہیں کشتیٔ اِسلام کے
کفر کے سیلاب سے کس نے بچایا! آپؐ نے

سامنے تاریخ کا رکھا ہوا ہے آئینہ
کتنے ذرّے تھے جنہیں سورج بنایا آپؐ نے

آپؐ ہی سے منسلک ہیں عظمتوں کی منزلیں
اِرتقا کا راستا کس نے دکھایا! آپؐ نے

آپؐ ہی سے ہم نے سیکھے زندہ رہنے کے اصول
جان دینے کا طریقہ بھی بتایا آپؐ نے

آج تک جس کی حفاظت کر رہی ہیں آندھیاں
دینِ فطرت کا چراغ ایسا جلایا آپؐ نے

خودبخود آسان ہوتی جا رہی ہیں مشکلیں
راستا اعجازؔ کو ایسا دکھایا آپؐ نے