جب دُور نگاہوں سے وہ کعبۂ جاں ٹھہرے