سارے جلوے رسول خدا آپؐ کے

سارے جلوے رسول خدا آپؐ کے
کہکشاں ساز ہیں نقشِ پا آپؐ کے

اتنے لمحے مری زندگی کے نہیں
جتنے احساں ہیں خیرالوریٰ آپؐ کے

دشمنوں پر کبھی ہاتھ اٹھایا نہیں
صرف اٹھے ہیں دستِ دعا آپؐ کے

آپ نے خلق کا درس ایسا دیا
غیر بھی ہو گئے ہم نوا آپؐ کے

حشر میں صرف ہے آپؐ کا آسرا
اور کوئی نہیں ہے سوا آپؐ کے

ہیں فدا تاجدار آپؐ کے نام پر
ہم تو خادم ہیں شاہِ ہدیٰ آپؐ کے

جب کسی راہ میں ڈگمگائے قدم
نقشِ پا بن گئے رہنما آپؐ کے

آپؐ کے در سے بہتر کوئی در نہیں
اور جائیں کہاں یہ گدا آپؐ کے

کوئی حسّانؓ ہے کوئی اعجازؔ ہے
کیسے کیسے ہیں مدحت سرا آپؐ کے